نو سو چوہے کھا کر بلی حج کو چلی

اگست 20, 2011

target killing incidents

…سیف اللہ…

پرانے وقتوں میں ایک بلی ہوتی تھی۔۔ جسے سب خالہ بلی کے نام سے پکارتے تھے۔ چوہوں کیلئے یہ بلی ٹارگٹ کلر سے کم نہ تھی۔ جہاں کوئی چوہا نظر آیا، بلی کے پنجے حرکت میں آئے اور کام تمام۔ لیکن کب تک؟؟

مزید پڑھنے کےلئے یہاں کلک کیجئے

Advertisements

جمشید دستی کو کامیاب کرانیوالوں کی نذر،فیض کی لازوال نظم

مئی 16, 2010

کتے

یہ گلیوں کے آوارہ بے کار کتے
کہ بخشا گیا جن کو ذوقِ گدائی
زمانے کی پھٹکار سرمایہ اُن کا
جہاں بھر کی دھتکار کمائی ان کی

نہ آرام شب کو ، نہ راحت سویرے
غلاظت میں گھر ، نالیوں میں  بسیرے
جو بگڑیں تو ایک دوسرے سے لڑا دو
ذرا  ایک  روٹی  کا   ٹکڑا  دکھا   دو

ہر   ایک    کی  ٹھوکر  کھانے  والے
یہ فاقوں سے اکتا کر مر جانے والے

یہ مظلوم مخلوق گر سر اٹھائے
تو انسان سب سرکشی بھول جائے
یہ چاہیں تو دنیا کو  اپنا بنا لیں
یہ آقاؤں کی   ہڈیاں  تک  چبا لیں

کوئی ان کو احساسِ ذلت دلا دے
کوئی ان کی سوئی ہوئی دُم ہلا دے

فیض احمد فیض