گورنرپنجاب سلمان تاثیراپنےمحافظ کےہاتھوںقتل

Governor Punjab Salman Taseer

 

…دانیال دانش…

گورنر پنجاب سلمان تاثیر اسلام آباد کے سیکٹر ایف سکس میں کے ایک ریسٹورنٹ سے کھانا کھاکر اپنی گاڑی میں بیٹھ رہے تھے کہ ان کے اسکواڈ میں شامل ممتاز قادری نامی ایلیٹ فورس کے جوان نے ان پر فائر کھول دیا ۔جس پر گورنر سلمان تاثیر کو پولی کلینک اسپتال لے جایا گیا جہاں وہ جانبر نہ ہوسکے۔اسپتال عملے کے مطابق سلمان تاثیر کوسینے ،گردن اور پیٹ میں نو گولیاں لگیں ۔جبکہ پمز اسپتال اسلام آباد میں ان کا پوسٹ مارٹم کیا جائے گا اور کل گورنر ہاؤس لاہور میں نماز جنازہ ادا کی جائے گی۔

سلمان تاثیرگزشتہ توہین رسالت کیس میں عدالت سے سزائے موت پانے والی آسیہ بی بی کی بے جامدد کرنے پر مذہبی حلقوں میں متنازعہ شخصیت بن گئے تھے ۔اور ان سے ناموس رسالت ایکٹ کیخلاف بھی بہت سی باتیں منسوب تھیں۔اور وہ اس قانون میں تبدیلی کے بھی خواہاں تھے ۔بلکہ ایک موقع پر انہوں نے اس قانون کو کالا قانون تک قرار دیا ۔جس کے بعد سے انہیں دھمکیاں موصول ہو رہی تھیں۔

دوسری جانب سلمان تاثیر کو قتل کرنے والے ایلیٹ پولیس فورس کے جوان ممتاز حسین قادری نے فائرنگ کے فوری بعد خود کوپولیس کے حوالے کردیا ۔جس پر اسے تھانہ کوہسار منتقل کردیا گیا۔ممتاز حسین قادری نے اپنے بیان میں بتایا ہے کہ اس نے سلمان تاثیر کو ناموس رسالت ایکٹ کو کالا قانون کہنے پر قتل کیا ہے ۔جس کی رحمان ملک نے بھی میڈیا کے سامنے تصدیق کردی ہے ۔

میڈیارپورٹس کے مطابق ممتازحسین قادری یکم جنوری انیس سوپچاسی کو راولپنڈی میں پیدا ہوا اور اس کو بچپن سے پولیس کی ملازمت کا شوق تھا۔اس کے پانچ بھائی ہیں جبکہ والد مستری کا کام کرتے ہیں۔ممتاز قادری شادی شدہ ہے اور اس کا چار ماہ کا ایک بچہ بھی ہے ۔اس کے علاقے کے لوگوں کا کہنا ہے کہ ممتاز قادری نماز روزے کا پابند تھا ۔تاہم وہ شدت پسندی کے سخت خلاف تھا۔

Mumtaz-Hussain-Qadri, Governor Punjab's guardپولیس حکام کے مطابق ممتازحسین قادری کو ایلیٹ فورس جوائن کئے ہوئے دو سال ہوئے ہیں اس سے پہلے و ہ راولپنڈی پولیس میں کانسٹیبل تھا۔کمانڈوٹریننگ کے بعد اس نے ایلیٹ فورس جوائن کی اور اسے گورنر پنجاب کی اسلام آباد موجودگی میں اسکواڈ میں شامل کیا جاتا تھا۔اور یہ اس کی پانچویں مرتبہ گورنر کے اسکواڈ میں شمولیت تھی۔قتل کے بعد قادری کے والد اور بھائیوں کو پولیس نے حراست میں لے کر نامعلوم مقام پر منتقل کردیا ہے ۔رحمان ملک کے مطابق پولیس یہ تفتیش کر رہی ہے کہ یہ ممتاز قادری کا ذاتی فعل تھا یا اس کے پیچھے کسی اور کا ہاتھ ہے ۔

پیپلزپارٹی نے ملک بھر میں سوگ کا اعلان کردیا ہے ۔جبکہ پنجاب حکومت نے بھی کل تعطیل کا اعلان کیا ہے ۔

لیکن گورنر ہاؤس پنجاب کے اطراف جس طر ح کی نعرے بازی کی جارہی ہے ۔ اس سے تو یہی لگتا ہے کہ اس قتل پر بھی سیاست شروع کر دی گئی ہے ۔

 

Advertisements

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: