بابا فریدکا مزار بھی بے گناہوں کے خون سے رنگین

…دانیال دانش…

بابا فریدالدین گنج شکر صوفی بزرگ تھے اور خطے میں دین اسلام کی تبلیغ میں بہت اہم کردار ادا کیا۔مگر ابلیس کے چیلوں نے آج پاک پتن میں ان کی درگاہ کے مشرقی دروازے کے قریب نماز فجر کے وقت دھماکہ کرکے 4 افرادکو شہید کردیا۔اس افسوس ناک واقعہ میں خواتین سمیت متعدد افراد زخمی ہیں ۔

شہید ہونے والوں کی لاشوں اور زخمیوں کو ڈی ایچ کیواسپتال منتقل کیا جارہا ہے اور امدای کارروائیاں جاری ہیں۔ پولیس کی بھاری نفری موقع پر پہنچ گئی ہے۔آر پی او کے مطابق دھماکا خیز مواد دودھ کے ڈرم میں رکھا گیا تھا جو زور دار دھماکے سے پھٹ گیا۔

یہ دوسرا موقع ہے کہ جب پنجاب میں کسی درگار پر دھماکہ ہوا ہے اس سے پہلے لاہور میں داتا گنج بخش کی درگار پر خودکش حملہ ہوا جس میں وہاں موجود کم از کم سینتیس افراد ہلاک اور ڈیڑھ سو سے زیادہ زخمی ہوگئے تھے۔جبکہ گزشتہ مہینے دہشت گردوں نے کراچی میں بھی عظیم ہستی حضرت عبداللہ شاہ غازی کے مزار پر حملہ کیا جس میں9 افراد شہید اور درجنوں زخمی ہوگئے تھے۔

بابا فریدالدین گنج شکرایک تعارف
بابا فریدالدین گنج شکر کا مزار نہ صرف مسلمانوں بلکہ ہر مذہب کے ماننے والوں کے لئے عقیدت وا حترام کی جگہ ہے ۔روزانہ ہزاروں مر د،خواتین ،بچے اور بزرگ فاتحہ خوانی اور منتیں مرادیں مانگنے آتے ہیں۔

بابا فریدالدین گنج شکر کچھ روایات کے مطابق گیارہ سو تہتر اور کچھ روایات کے مطابق گیارہ سو اسی میں ملتان کے گاؤں کوٹھے وال میں پیدا ہوئے۔ ابتدائی تعلیم ملتان ہی میں حاصل کی۔ چشتیہ سلسلے کے بزرگ خواجہ قطب الدین بختیار کاکی کے مرید بنے۔ تحصیل علم کے دنیا کے کئی ملکوں کا سفر کیا آخر دہلی میں اپنے مرشد کے پاس آگئے۔ خواجہ بختیار کاکی کے انتقال کے بعد ان کی جگہ لی اور اجودھن میں اقامت اختیار کی۔ اجودھن پاک پتن کا پرانا نام ہے۔کہا جاتا ہے کہ دریائے ستلج اس زمانے میں اجودھن کے قریب سے گزرتا تھا۔ ایک دن بابافرید یہاں وضو کررہے تھے کہ کسی نے کہا کہ یہ پتن یعنی کنارہ ناپاک ہے۔ آپ نے فرمایا نہیں یہ پاک پتن ہے یعنی پاک کنارہ ۔آہستہ آہستہ یہ نام زبان زد عام و خاص ہوگیا اوراجودھن قصہ ماضی بن گیا۔

مشہور مؤرخ ابن بطوطہ نے بھی بابافرید سے ملاقات کی تھی، ابن بطوطہ نے اپنی کتاب میں بابا صاحب کی بہت تعریف کی ہے۔بابافرید نے نہ صرف خطے میں اسلام کی تبلیغ کی بلکہ وہ اتنے اچھے شاعر تھے کہ انھیں پنجابی زبان کا پہلا بڑا شاعر مانا جاتا ہے۔آپ کا انتقال پانچ محرم کو ہوا۔ لاکھوں عقیدت مندآپ کے مزار پر حاضری دیتے ہیں۔

………………………………….

دانیال دانش کی گزشتہ تحریریں

مظفرگڑھ کے باشعورعوام زندہ باد

یوم باب الاسلام ،اورکہاں ہے محمد بن قاسم؟

نصرت فتح علی خان:فن موسیقی کا دیوتا

اور عمر عبداللہ بھی جوتا کلب میں شامل ہوگئے

ہم ایک ہیں،ثابت کرنیکا وقت آگیا

یہ کوئی نئی بات نہیں

عامر لیاقت حسین ARYکو پیارے ہوگئے

دوستو…میرا شہر جل رہا ہے

کامران اکمل کی پرفارمنس ایک بارپھر مشکوک

کشمیرجو ہمیں بھولتا جارہا ہے

ڈاکٹر شاہد مسعود اب آروائی نیوز پر۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔؟

ورلڈ کپ فٹبال:پال کی تمام پیش گوئیاں درست ثابت ہوئیں

بلا عنوان

یہ شادی نہیں ہوسکتی

 

Advertisements

2 Responses to بابا فریدکا مزار بھی بے گناہوں کے خون سے رنگین

  1. جاویداقبال نے کہا:

    اللہ تعالی فوت شدگان کی مغفرت فرمائیں۔ آمین ثم آمین
    پتہ نہیں میرےملک کوکسی کی نظرلگ گئی ہےجہاں پردیکھوبم دھماکےہورہےہیں کہیں پرمہنگائی سےپسےہوئےلوگ مررہےہیں کہیں سیلاب کی تباہ کاریاں ہیں ۔ یااللہ میرےملک پررحم وکرم کی بارش فرما۔ آمین ثم آمین

  2. کاشف نصیر نے کہا:

    یہ دو بڑے مکاتب فکر کو لڑانے کی سازش معلوم ہوتی ہے۔

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: